جمال خاشوقجی کے قتل کی تحقیقات میں سعودی عرب کی جانب سے رکاوٹ

0
7

اقوام متحدہ کے تحقیقاتی کمیشن کی جانب سے انکشاف سامنے آیا ہے کہ سعودی عرب نے جمال خاشوقجی کے قتل کی تحقیقات روکنے کی کوشش کی۔

غیرملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق اقوام متحدہ کے تحقیقاتی کمیشن کے ایک اہلکار نے انکشاف کیا ہے کہ سعودی نژاد صحافی جمال خاشوقجی کے قتل کی تحقیقات سعودی عرب کی جانب سے روکنے کی کوشش کی گئی ہے۔اطلاعات کے مطابق ترکی کو استنبول کے سعودی کونسل خانے میں 2ہفتے تک رسائی نہیں دی گئی۔تاہم اقوام متحدہ کا تحقیقاتی کمیشن جمال خاشوقجی کے قتل کی انکوائری رپورٹ رواں سال جون میں پیش کرے گی۔

جمال خاشوقجی سعودی نژاد صحافی تھے جو واشنگٹن پوسٹ کے لیئے کالم لکھتے تھے۔جمال خاشوقجی کو شاہی خاندان اور فرماں رواکے سخت ناقد کے طور پر جانا جاتا تھا۔

گزشتہ برس جمال خاشوقجی 2اکتوبر کو ضروری کاغذات سمیت استنبول میں موجود سعودی کونسل خانے گئے تھے جس کے بعد وہ لاپتہ ہوگئے تھے۔تاہم عالمی دباؤ کے باعث سعودی عرب نے ترکی کے سعودی کونسل خانے میں جمال خاشوقجی کے قتل کی تصدیق کردی تھی۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here