یک باپ نے اپنے بیٹے کو دو تین تھپڑ رسید کر دیئے

0
0

یک باپ نے اپنے بیٹے کو دو تین تھپڑ رسید کر دیئے تھوڑی دیر بعد جب غصہ ٹھنڈا ہوا تو پیار سے اپنے بیٹے کو سوری بول دیا۔
بیٹا: ابو جان! ایک کاغذ لیں، اسکو اچھی طرح رول کریں، پھر واپس اس کاغذ کو کھولیں کیا وہ پہلے جیسا ہی کڑک اور نیا ہے ۔.؟
باپ: نہیں ۔۔!
بیٹا: سہی کہا رشتے بھی ایسے ہی ہوتے ہیں سوری یا معذرت کرنے سے کام نہیں چلتا۔
باپ: اچھا بیٹا ایک کام کرو باہر میرا سکوٹر کھڑا ہے! جاؤ اور اس پر ایک کک مارو۔۔!
بتاؤ وہ سٹارٹ ہوا۔۔؟
بیٹا: جی نہیں ۔۔!
باپ: اب اسے تین چار کک مارو۔۔!
بیٹا: ہو گیا سٹارٹ۔۔!

باپ: تو بھی وہی سکوٹر ہے کوئی کاغذ نہیں 
اٹھ بغیرتا ایڈا توں اشفاق احمد ۔۔!😏😕
👻👻😁😁😂😂😂😂

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here